فیصل واوڈا نے قومی اسمبلی کی نشست سے استعفیٰ دے دیا 474

فیصل واوڈا نے قومی اسمبلی کی نشست سے استعفیٰ دے دیا


 وفاقی وزیر فیصل واوڈا نے قومی اسمبلی کی نشست سے استعفیٰ دے دیا۔تفصیلات کے مطابق فیصل واوڈا کے خلاف نااہلی کیس کی سماعت جسٹس عمر فاروق کر رہے ہیں۔ آج حکمران جماعت کے رکن قومی اسمبلی فیصل واوڈا قومی اسمبلی کی نشست سے مستعفی ہو گئے ہیں۔ فیصل واوڈا کے وکیل نے استعفیٰ اسلام آباد ہائیکورٹ میں پیش کر دیا۔فیصل واوڈا کے وکیل کا کہنا ہے کہ فیصل واوڈا کے خلاف نااہلی کیس غیر موثر ہو چکا ہے۔انہوں نے استدعا کی کہ فیصل واوڈا کے خلاف نااہلی کی درخواست غیر موثر قرار دی جائے کیونکہ وہ مستعفی ہو چکے ہیں۔فیصل واوڈا نے سینیٹ انتخابات میں ووٹ کاسٹ کرنے کے بعد قومی اسمبلی کی نشست سے استفعی دیا۔واضح رہے کہ الیکشن ٹربیونل پاکستان تحریک انصاف کے سینیٹ اُمیدوار فیصل واوڈا کو سینیٹ الیکشن کے لیے اہل قرار دے چکا ہے۔یاد رہے کہ سینیٹ انتخابات کے لیے پاکستان تحریک انصاف کے رہنما فیصل واوڈا کی جانب سے جمع کروائے گئے کاغذات نامزدگی کو سندھ ہائیکورٹ میں چیلنج کیا گیا تھا۔ پپیلز پارٹی کے رہنما قادر مندوخیل کی جانب سے فیصل واوڈا کے کاغذات نامزدگی منظور کرنے کو عدالت میں چیلنج کیا گیا تھا۔ قادر خان مندوخیل کی جانب سے دائر درخواست میں فیصل واوڈا کو نااہل قرار دینے کی استدعا کرتے ہوئے کہا گیا تھا کہ فیصل واوڈا نے امریکی شہریت سے متعلق حقائق چھپائے۔ایڈووکیٹ قادر خان مندوخیل نے درخواست میں مؤقف اختیار کیا کہ ریٹرننگ افسر کے سامنے اعتراضات دائر کیے مگر انہوں نے سننے سے انکار کر دیا، ریٹرننگ افسر کا اقدام غیر قانونی اور غیرآئینی ہے۔ فیصل واوڈا حقائق چھپانے پر عوامی عہدے کے لیے نااہل ہیں لہذا ان کے کاغذات نامزدگی مسترد کیے جائیں اور انہیں سینیٹ الیکشن کے لیے نا اہل قرار دیا جائے۔

50% LikesVS
50% Dislikes

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں